سانحہ کرائسٹ چرچ کے سلسے میں ہیگلے پارک میں تعزیتی تقریب

سانحہ کرائسٹ چرچ کے سلسلے میں ہیگلے پارک میں شہداء سے اظہارِ ہمدردی کے لیے تعزیتی تقریب رونمائی ہوئی۔ جس میں چالیس ہزار افراد نے شرکت کی جس میں تمام مذاہب و رنگ و نسل کے افراد شامل تھے۔

سانحہ کو دس روز گزر جانے کے باوجود شہداء کے زخم ابھی بھی تازہ ہیں۔ نیوزی لینڈ کی فضا ابھی تک سکتے میں ہیں۔ ہیگلے پارک بالکل مسجد النور کےسامنے ہے جہاں سانحہ کرائسٹ ہوا تھا۔ چونکہ پارک بہت وسییع ہونے کی وجہ سے بہت لوگ یہاں سماں سکتے ہیں اور چالیس ہزار لوگوں نے یہاں پہنچ کر اپنی ہمدردی کا ثبوت پیش کیا۔

اس موقع پر فرید احمد بھی موجود تھا جو اس سانحہ میں زخمی ہوا تھا اورخوش قسمتی سے زندہ بچ گیا تھا مگر اس کی بیوی اس سانحہ میں شہید ہو گئ تھی۔ فرید کا کہنا ہے کہ دکھ کی گھڑی میں ہما ری دادرسی کرنےکا شکریہ۔

ادھر سڈنی میں بھی سانحہ کےشہداء کی تعزیت کے لئے تعزیتی تقریب رونمائی ہوئی۔ جس میں اسٹریلیا کے باشندوں نے روایتی ہاکا پیش کر کے ہمدردی حاصل کی۔

جیسنڈا آرڈن جوکہ نیوزی لینڈ کی وزیرِاعظم ہیں اور ایک عوام دوست لیڈر کےطور پر عوام کے سامنے اُبھری ہیں۔ جیسنڈا آرڈن اپنے عوام دوست روئے کی وجہ سے پوری دنیا میں کافی مقبول ہو گئی ہیں تاہم انہیں اب اس جیسے واقعات سے بچنے کے لئے بہتر حکمتِ عملی اپنانی ہو گی۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Close Menu
HTML Snippets Powered By : XYZScripts.com